Warning: Invalid argument supplied for foreach() in /customers/5/9/3/siasatpakistan.com/httpd.www/wp-content/themes/newspress-extend/function/imp.php on line 26
Main Menu

رنبیر کپور کی والدہ عالیہ بھٹ کو جلد بہو بنانے کی خواہاں

بولی وڈ چاکلیٹی ہیرو رنبیر کپور اور اداکارہ عالیہ بھٹ کے درمیان گزشتہ ڈیڑھ سال سے تعلقات کی خبریں سامنے آ رہی ہیں۔

گزشتہ ڈیڑھ سال سے جہاں رنبیر کپور اور عالیہ بھٹ کو ایک ساتھ دیکھا گیا، وہیں دونوں’براہمسٹرا‘ کی شوٹنگ میں بھی مصروف ہیں، جو ان دونوں کی ایک ساتھ پہلی فلم ہوگی۔

ان دونوں کے تعلقات کی خبریں اب یہاں تک پہنچ چکی ہیں کہ رنبیر کپور کو اکثر عالیہ بھٹ کے گھر ان کے اہل خانہ کے ساتھ دیکھا جاتا ہے۔

وہیں عالیہ بھٹ کو بھی رنبیر کپور کے اہل خانہ کے ساتھ ان کے گھر دیکھا جاتا ہے۔

اپنی محبت اور تعلقات کے حوالے سے دونوں ہی ذو معنی لفظوں میں اقرار کر چکے ہیں، تاہم دونوں نے واضح طور پر ایک دوسرے سے محبت کا اعتراف نہیں کیا۔

جہاں رنبیر کپور کہ چکے ہیں کہ ان کے اور عالیہ بھٹ کے درمیان تعلقات ابھی ابتدائی مراحل میں ہیں، وہیں عالیہ بھٹ یہ اعتراف کر چکی ہیں کہ وہ 11 سال کی عمر سے رنبیر کپور کو چاہتی تھیں۔

اگرچہ یہ پہلے یہ اطلاعات بھی تھے کہ دونوں رواں برس کے اختتام تک شادی کے بندھن میں بندھ جائیں گے۔

تاہم اب اس حوالے سے اہم خبر سامنے آئی ہے کہ رنبیر کپور کی والدہ دونوں کی منگنی کروانا چاہتی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق نیتو کپور کی خواہش ہے کہ دونوں اپنی پہلی فلم ’براہمسٹرا‘ کی ریلیز کے فوری بعد منگنی کریں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ نیتو کپور کی جانب سے گرین سگنل دیے جانے کے بعد ان کی خواہش کے مطابق رنبیر کپور اور عالیہ بھٹ رواں برس جون تک منگنی کرلیں گے۔

یہ بھی کہا جا رہا ہے کہ منگنی کے چند ماہ بعد ہی دونوں شادی کے بندھن میں بندھ جائیں گے، تاہم اس حوالے سے حتمی طور پر کچھ نہیں کہا جا سکتا۔

اس وقت جہاں رنبیر کپور اور عالیہ بھٹ براہمسٹرا کی شوٹنگ میں مصروف ہیں، وہیں عالیہ بھٹ ساتھی اداکار رنویر سنگھ کے ساتھ آنے والی فلم ’گلی بوائے‘ کی تشہیر میں بھی مصروف ہیں۔

گلی بوائے میں بھی پہلی بار رنویر اور عالیہ بھٹ ایک ساتھ کام کرتے نظر آئیں گے۔

اس فلم میں دونوں نے اسٹریٹ ریپرز کا کردار ادا کیا ہے، جو ایک دن بڑے اسٹار بن جاتے ہیں۔






Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked as *

*