Main Menu

ڈیم کی مخالفت کرنے والے کسی اور کے ایجنڈے پر کام کر رہے ہیں: چیف جسٹس

پاکستان کی عدالتِ عظمیٰ( سپریم کورٹ ) کے چیف جسٹس ، جسٹس میاں ثاقب نثار نے کہا ہے کہ ڈیموں کی تعمیر پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا۔ ایک سیاستدان نے کہا کہ سپریم کورٹ کو سیاسی پارٹی بنا لینی چاہئے۔ یہ کسی کو کہنے کی ضرورت نہیں یہ بنیادی انسانی حقوق کا معاملہ ہے۔ بے شک کوئی کتنا بڑا سیاستدان یا اپوزیشن لیڈر ہی کیوں نہ ہو جو مخالفت کر رہے ہیں وہ کسی اور کے ایجنڈے پر کام کر رہے ہیں،مخالفت والوں کا ایجنڈا ہے، ملک میں ڈیم نہ بنیں ہم ڈیم نہ بننے کے ایجنڈے کو پورا نہیں ہونے دینگے۔

چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ آنے والی نسلوں کے مستقبل کے لئے ڈیم بنا کر رہیں گے۔ ڈیم کے مخالفین کو آخری وارننگ دے رہے ہیں جو عدالت کو بدنام کرینگے، انہیں ایسے جانے نہیں دینگے۔ ڈھڈوچہ ڈیم کی تعمیر کے حوالے سے کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ جو لوگ ڈیم کے ایشو پر یہ کہہ کر عدالت کو بدنام کر رہے ہیں کہ سپریم کورٹ سیاسی جماعت بنا لے اس معاملہ پر کسی کو سیاست نہیں کرنے دینگے۔ یہ انسانی حقوق کا معاملہ ہے۔ کوئی عدالت کو بدنام کرنے کی کوشش نہ کرے جو پاکستان میں ڈیم بننے کے مخالف ہیں ان کا ایجنڈا مکمل نہیں ہونے دینگے۔ پنجاب حکومت ٹائم فریم دے کب تک ڈھڈوچہ ڈیم مکمل کرے گی۔

چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ پنجاب حکومت کمیشن کے لئے ڈیم بنانا چاہ رہی ہے۔ سپریم کورٹ خود اس معاملہ کی نگرانی کرے گی اور کسی کو بھی اس ڈیم پر کمیشن نہیں بنانے دے گی۔ اگر ضرورت پڑی تو وزیراعلیٰ پنجاب کو بھی بلا کر وضاحت طلب کی جائے گی۔






Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked as *

*