Main Menu

نواز شریف ، مریم صفدر کا لندن سے اڈیالہ جیل تک کا سفر مکمل

پانامہ کیس میں سزا یافتہ پاکستان کے سابق وزیراعظم اور ان کی دختر مریم صفدر کو پاکستان واپس پہنچنے پر گرفتار کر کے اڈیالہ جیل بھیج دیا گیا۔

مسلم لیگ ن کے رہنما دونوں باپ بیٹی اتحار ایئر لائن کی پروا ز کے ذریعے لندن اور ابو ظہبی سے ہوتے ہوئے جمعہ کی رات نو بجے لاہور کے علامہ اقبال انٹرنیشنل ایئر پورٹ پر پہنچے جہاں انہیں قومی احتساب بیورو(نیب) کی ٹیم نے حراست میں لے کر ایک خصوصی طیارے کے ذریعے اسلام آباد پہنچا دیا۔

نواز شریف اور مریم صفدر کو اسلام آباد ایئرپورٹ سے الگ، الگ اسکواڈ کے ذریعے اڈیالہ جیل منتقل کیا گیا، جہاں دونوں کا مجسٹریٹ اور سینئر پولیس حکام کی موجودگی میں طبی معائنہ بھی کیا گیا۔

جمعہ کے روز نااہل وزیراعظم کے لیئے ان کے بھائی سابق وزیراعلی پنجاب شہباز شریف اور ان کے بیٹے حمزہ شہباز نے ایک ریلی نکالی جو ایئرپورٹ پہنچنے میں ناکام رہی۔

ن لیگ کے کارکن سار ا دن لاہور میں مختلف مقامات پر اپنے جذبوں کا اظہار کرتے نظر آئے تاہم ان کی جماعت کے تاحیات قائد اور ان کی بیٹی نے ان سے جو بڑی بڑی توقعات وابستہ کر رکھی تھیں وہ اس پر پورا اترنے میں ناکام نظر آئے۔

یاد رہے کہ ایون فیلڈ اپارٹمنٹس کیس کے فیصلے میں نواز شریف کو دس برس اور ان کی بیٹی کو آٹھ برس کی قید کی سزا ہوئی ہے جبکہ مریم کے خاوند کپٹن صفدر ایک برس کے لیئے جیل جا چکے ہیں۔

شریف خاندان کا بظاہر لندن سے اڈیالہ جیل کا سفر مکمل ہو گیا لیکن انتخابات میں مسلم لیگ کو اگر ناکامی کا سامنا کرنا پڑا تو پھر ان کی سیاست کے تخت کا بھی دھڑن تختہ سمجھا جائے گا۔






Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked as *

*