Main Menu

اے پی سی اعلامیہ : شہباز شریف ، رانا ثنااللہ کو استعفے کیلئے 7 جنوری کی مہلت

 پاکستان عوامی تحریک کے زیر اہتمام ڈاکٹر طاہر القادری کی زیر صدارت منعقدہ آل پارٹیز کانفرنس( اے پی سی) میں وزیراعلی پنجاب شہباز شریف اور پنجاب ہی کے وزیر قانون رانا ثناءاللہ اور سانحہ میں ملوث بیورو کریٹس کے استعفوں کی ڈیڈ لائن 7جنوری دیتے ہوئے کہا ہے کہ آئندہ کے احتجاجی لائحہ عمل کا اعلان 7جنوری کو سٹیرنگ کمیٹی کرے گی :

ہفتہ کے روز منعقد ہونے والی اے پی سی میں دس نکاتی اعلامیہ میں مطالبہ کیا گیا کہ صوبائی اسمبلیاں اور سینیٹ شہباز شریف اور رانا ثناءاللہ کے استعفوں پر مبنی قراردادیں منظور کر یں۔APC میں پاکستان پیپلز پارٹی،پاکستان تحریک انصاف،پاکستان مسلم لیگ (ق)،عوامی مسلم لیگ،جماعت اسلامی،پی ایس پی ،مجلس وحدت المسلمین،مسلم کانفرنس،سنی اتحاد کونسل، جمیعت علماءپاکستان ،جمعیت علمائے پاکستان (نیازی)،جمعیت علمائے پاکستان (نورانی)،جمعیت اہلحدیث پاکستان (محمد علی یزدانی )، پاکستان عوامی راج پارٹی (جمشید احمد دستی )،جمعیت علماءاسلام نظریاتی(محمد زبیر البازی) بلوچستان نیشنل عوامی پارٹی و دیگر نے شرکت کی۔

اعلامیہ کے مطابق سٹیرنگ کمیٹی ہنگامی صورتحال میں فیصلے کرنے کی مجاز ہو گی۔ سٹیرنگ کمیٹی کے ممبران درج ذیل ہوں گے1۔ پاکستان پیپلز پارٹی( قمر الزمان کائرہ،سردار لطیف خان کھوسہ)تحریک انصاف(شفقت محمود، عبدالعلیم خان)عوامی مسلم لیگ(شیخ رشید) پاکستان مسلم لیگ ق(سینیٹر کامل علی آغا) جماعت اسلامی (لیاقت بلوچ)مجلس وحدت المسلمین(ناصر شیرازی) پاک سرزمین پارٹی(رضا ہارون) مسلم کانفرنس(سردار عتیق احمد خان) سنی اتحاد کونسل(صاحبزادہ حامد رضا) ،بلوچستان نیشنل پارٹی عوامی (سید احسان شاہ)۔میاں منظور احمد وٹو، جہانگیر ترین ،خرم نوازگنڈاپور سٹیرنگ کمیٹی کے کوآرڈینیٹر ہونگے۔






Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked as *

*